NohayOnline

Providing writeups (english & urdu) of urdu nohay, new & old


Laashe pa kar rahi

Nohakhan: Irfan Hussain


laashe pa kar rahi hai laila ye nauha khani
nazron may phir rahi hai akbar teri jawani

allah walon bolo aakhir uthaye kyun kar
mayyat jawan pisar ki sarwar ki natawani
laashe pa kar rahi...

ghairon ka phir gila kya jab kalmago ke haathon
hamshakle mustafa ki mit-ti hai naujawani
laashe pa kar rahi...

sheh bolay maarte ho tum kis ke dil pe barchi
ay kalma padne walon ye hai nabi ka saani
laashe pa kar rahi...

naazon may palne wala naizon ki zad may aaya
zainab suna rahi hai ye dard ki kahani
laashe pa kar rahi...

laashe pe naujawan ke laila ye keh rahi thi
nasoor ban gayi hai bin tere zindagani
laashe pa kar rahi...

behosh ho gayi thi sunkar watan may sughra
zainab ne thi sunayi akbar ki jab sunani
laashe pa kar rahi...

ranj o gham o alam se abbas ko bacha lo
laila ke laal karke irfan pa meherbani
laashe pa kar rahi...

لاشے پہ کر رہی ہے لیلیٰ یہ نوحہ خوانی
نظروں میں پھر رہی ہے اکبر تیری جوانی

اللہ والوں بولو آخر اٹھاے کیوں کر
میت جواں پسر کی سرور کی نا توانی
لاشے پہ کر رہی۔۔۔

غیروں کا پھر گلہ کیا جب کلمہ گوں کے ہاتھوں
ہمشکل مصطفیٰ کی مٹتی ہے نوجوانی
لاشے پہ کر رہی۔۔۔

شہ بولے مارتے ہو تم کس کے دل پہ برچی
اے کلمہ پڑھنے والوں یہ ہے نبی کا ثانی
لاشے پہ کر رہی۔۔۔

نازوں میں پلنے والا نیزوں کی ضد میں آیا
زینب سنا رہی ہے یہ درد کی کہانی
لاشے پہ کر رہی۔۔۔

لاشے پہ نوجواں کے لیلیٰ یہ کہہ رہی تھی
ناسور بن گیء ہے بن تیرے زندگانی
لاشے پہ کر رہی۔۔۔

بے حوش ہو گیء تھی سن کر وطن میں صغرا
زینب نے تھی سنای اکبر کی جب سنانی
لاشے پہ کر رہی۔۔۔

رنج و غم و الم سے عباس کو بچا لو
لیلیٰ کے لال کرکے عرفاں پہ مہربانی
لاشے پہ کر رہی۔۔۔