زیرِ خنجر بھی سجدہ کیا کون ہے
جُز تیرے اے شاہِ کربلا کون ہے

کشتیِ دیں سے ٹکرا کے موجِ بلا
فکر میں پڑ گئی نا خُدا کون ہے
زیرِ خنجر بھی ۔۔۔۔۔

وہ نہ منزل پہ پہنچے جو پوچھا کیئے
جس نے چھوڑیں ہیں یہ نفسِ پا کون ہے
زیرِ خنجر بھی ۔۔۔۔۔

گردشِ وقت کیا تو ں نہیں جانتی
ہم غریبوں کا مشکل کشائ کون ہے
زیرِ خنجر بھی ۔۔۔۔۔  

کس کا کردار شبیر کو مل گیا
یہ پسِ پردہ ، کربلا کون ہے
زیرِ خنجر بھی ۔۔۔۔۔  

یاد آئے جو عباس شہ نے کہا
کس کو دوںاب میں دادِ وفا کون ہے
زیرِ خنجر بھی ۔۔۔۔۔

شہ کا کہنا یہ زینب سے جاتے ہیں ہم
اب ہمارے سوا دوسرا کون ہے
زیرِ خنجر بھی ۔۔۔۔۔

جس کو غم ہو شاہِ کربلا کا عروج
وہ نہیں ہے تو غم آشنا کون ہے
زیرِ خنجر بھی ۔۔۔۔۔


zere khanjar bhi sajda kiya kaun hai
juz tere ay shahe karbala kaun hai

kashtiye deen se takrake mauje bala
fikr may padh gayi na khuda kaun hai
zere khanjar bhi....

wo na manzil pe pahunche jo poocha kiye
jisne chode hai ye nafse pa kaun hai
zere khanjar bhi....

gardishe waqt kya tu nahi jaanti
hum ghaeerbo ka mushkil kusha kaun hai
zere khanjar bhi....

kiska kirdaar shabbir ko mil gaya
ye pasay pardaye karbala kaun hai
zere khanjar bhi....

yaad aaye jo abbas sheh ne kaha
kisko doo ab mai daade wafa kaun hai
zere khanjar bhi....

sheh ka kehna ye zainab se jaate hai hum
ab hamare siwa doosra kaun hai
zere khanjar bhi....

jisko gham ho shahe karbala ka urooj
wo nahi hai to gham aashna kaun hai
zere khanjar bhi....
Noha - Zere Khanjar Bhi Sajda
Shayar: Urooj Bijnori
Nohaqan: Tableeq e Imamia (Nazim Hussain)
Download Mp3
Listen Online