شبِ ضربت ماہِ رمضان
علی کا یہ کہنا ہے
یہ زندگی بعدِ زہرا
با خدا شکستہ ہے
آہ تیرے بعد اے زہرا
میں دل سوز و شکستہ
میں دل زار و گرفتہ

خدا نگہدار کے میں مسافرِ شب زندہ دور
خدا نگہدار کے میں پیکرِ دلفگار
یا علی، یا علی۔۔۔۔۔

روز و شبِ ویرانی
زندگی یہ زندانی
زندگی یہ بعدِ زہرا
با خدا نہیں کٹتی
خدا نگہدار کے میں مسافرِ شب زندہ دور
خدا نگہدار کے میں پیکرِ دلفگار
یا علی، یا علی۔۔۔۔۔

ہائے دردِ دل میرے
جو علی نہ کہہ پایا
راز وہ لیے دل میں
جا رہاہے اے دنیا
کل نہ سلونی سُنو گے
کل نہ سُلونی کہو ں گا
میں چلا سوئے کردگار
خدا نگہدار کے میں مسافرِ شب زندہ دور
خدا نگہدار کے میں پیکرِ دلفگار
یا علی، یا علی۔۔۔۔۔

وہ علی ہوں جنگوں میں
جس نے موت کو گھیرا
فاطمہ کی فرقت میں ضبط کھو گیا میرا
ہائے تیرے بعد اے زہرا
ہائے ویران ہے دُنیا
میں چلا سوئے کردگار
خدا نگہدار کے میں مسافرِ شب زندہ دور
خدا نگہدار کے میں پیکرِ دلفگار
یا علی، یا علی۔۔۔۔۔

ہائے فاطمہ زہرا
صبر کیسا پایا تھا
راز زخمی پہلو کا
مجھ سے بھی چھُپایا تھا
میں کبھی بھُول نہ پایا وہ
تیرا پہلو شکستہ
میں چلا سوئے کردگار
خدا نگہدار کے میں مسافرِ شب زندہ دور
خدا نگہدار کے میں پیکرِ دلفگار
یا علی، یا علی۔۔۔۔۔

اس ستم نے اے زہرا
کتنا مجھ کو رُلوایا
میں علی تھا اور تیرا
حق نہ میں دلا پایا
ہائے تُو دُخترِ آقا
اور دربار میں جانا
میں چلا سوئے کردگار
خدا نگہدار کے میں مسافرِ شب زندہ دور
خدا نگہدار کے میں پیکرِ دلفگار
یا علی، یا علی۔۔۔۔۔

آ رہا ہوں اے زہرا
میں بھی جانبِ منزل
خدا حافظ و ناصر
میں چلا سوئے قاتل
کل میرا آخری کلمہ
فُزت و بے ربِالکعبہ
میں چلا سوئے کردگار
خدا نگہدار کے میں مسافرِ شب زندہ دور
خدا نگہدار کے میں پیکرِ دلفگار
یا علی، یا علی۔۔۔۔۔


shabe zarbate maahe ramzan
ali ka ye kehna hai
ye zindagi baad e zehra
ba khuda shakista hai
aah tere baad ay zehra
mai dil soz o shakista
mai dil zaar o girafta

khuda nigeh daar ke mai musafir e shab zinda daur
khuda nigeh daar ki mai paykare dil-figaar
ya ali, ya ali...

roz o shabe  veerani
zindagi ye zindani
zindagi ye baad e zehra
ba khuda nahi kat-ti
khuda nigeh daar ke mai musafir e shab zinda daur
khuda nigeh daar ki mai paykare dil-figaar
ya ali, ya ali...

haaye dard e dil mere
jo ali na keh paaya
raaz wo liye dil may
ja raha hai ay dunya
kal na salooni sunoge
kal na salooni kahunga
mai chala suye kirdigaar
khuda nigeh daar ke mai musafir e shab zinda daur
khuda nigeh daar ki mai paykare dil-figaar
ya ali, ya ali...

wo ali hoon jango may
jisne maut ko ghera
fatima ki furqat may zabt khogaya mera
haye tere baad ay zahra
haye veeran hai dunya
mai chala suye kirdigaar
khuda nigeh daar ke mai musafir e shab zinda daur
khuda nigeh daar ki mai paykare dil-figaar
ya ali, ya ali...

haye fatima zehra
sabr kaisa paaya tha
raaz zakhmi pehlu ka
mujhse bhi chupaya tha
mai kabhi bhool na paaya wo
tera pehlu shakista
mai chala suye kirdigaar
khuda nigeh daar ke mai musafir e shab zinda daur
khuda nigeh daar ki mai paykare dil-figaar
ya ali, ya ali...

is sitam ne ay zahra
kitna mujhko rulwaya
mai ali tha aur tera
haq na mai dila paaya
haye tu dukhtar e aaqa
aur darbar may jaana
mai chala suye kirdigaar
khuda nigeh daar ke mai musafir e shab zinda daur
khuda nigeh daar ki mai paykare dil-figaar
ya ali, ya ali...

aa raha hoo ay zahra
mai bhi jaanib e manzil
khuda haafiz o naasir
mai chala suye qaatil
kal mera aakhri kalma
fuzto be rabbil kaaba
mai chala suye kirdigaar
khuda nigeh daar ke mai musafir e shab zinda daur
khuda nigeh daar ki mai paykare dil-figaar
ya ali, ya ali...
Noha - Ya Ali

Nohaqan: Nadeem Sarwar
Download Mp3
Listen Online