وفا کے شہر کے مہمان حضرتِ عباس
حُسینی فوج کے سالار حضرتِ عباس

حفاظتِ حرمِ سبطِ مصطفیٰ کے لیئے
تمام شب رہے بیدار حضرتِ عباس
وفا کے شہر۔۔۔۔۔

نظر میں پھر گیا نقشہ چچا بھتیجے کا
علم ہوا جو نمودار حضرتِ عباس
وفا کے شہر۔۔۔۔۔

کمر کو تھامے ہوئے کہتے جاتے ہیں شبیر
کہاں ہے میرا علمدار حضرتِ عباس
وفا کے شہر۔۔۔۔۔

کبھی نہ مانگوں گی پانی خدارا آ جائو
سکینہ کرتی ہے اقرار حضرتِ عباس
وفا کے شہر۔۔۔۔۔

تمہاری بالی سکینہ ہے سخت مشکل میں
جفا سے نیلے ہیں رُخسار حضرتِ عباس
وفا کے شہر۔۔۔۔۔

ردائیں چھینتے ہیں سر سے اعدا رانڈوں کی
نہیں ہے کوئی طرفدار حضرتِ عباس
وفا کے شہر۔۔۔۔۔

گلا بندھا ہے رسن سے سکینہ پیاری کا
ہے سانس لینا بھی دشوار حضرتِ عباس
وفا کے شہر۔۔۔۔۔

یہ نوحہ وردِ زباں تھا انیس سرور کے
کہاں ہو میرے وفادار حضرتِ عباس
وفا کے شہر۔۔۔۔۔


wafa ke shehr ke mehman hazrate abbas
hussaini fauj ke salaar hazrate abbas

hifazate harame sibte mustufa ke liye
tamam shab rahe bedaar hazrate abbas
wafa ke shehr....

nazar may phir gaya naksha chacha bhatije ka
alam hua jo namoodar hazrate abbas
wafa ke shehr....

kamar ko thaamay hue kehte jaate hai shabbir
kahan hai mera alamdar hazrate abbas
wafa ke shehr....

kabhi na maangungi pani khudara aajao
sakina kart hai ikraar hazrate abbas
wafa ke shehr....

tumhari bali sakina hai sakht mushkil may
jafa se neele hai ruksaar hazrate abbas
wafa ke shehr....

ridayein cheente hai sar se aada raando ki
nahi hai koi tarafdaar hazrate abbas
wafa ke shehr....

gala bandha hai rasan se sakina pyari ka
hai saans lena bhi dushwaar hazrate abbas
wafa ke shehr....

ye noha wirde zaban tha anees sarwar ke
kahan ho mera wafadaar hazrate abbas
wafa ke shehr....
Noha - Wafa Ke Shehr
Shayar: Anees
Nohaqan: Tableeq e Imamia (Nazim Hussain)
Download Mp3
Listen Online