شاہ است حُسین بادشاہ است حُسین
دیں است حُسین دیں پناہ است حُسین

سر داد نہ داد دست در دست ِ یزید
حقا کہ بنا لا الٰہ است حُسین

سردار و شہنشاہ اے شاہِ شہیداں
قاری سرِ نیزہ اے وارثِ قرآن
کہتی ہیں نمازیں اب تک سرِ میدان
سُنو زندہ ہے حُسین سُنو زندہ ہے حُسین
شاہ است حُسین ۔۔۔

اذاں و نمازیں میلادِ محمد
یہ مجلس و ماتم عباس کا پرچم
کہتی ہیں سبیلیں کہتا ہے محرم
سُنو زندہ ہے حُسین سُنو زندہ ہے حُسین
شاہ است حُسین ۔۔۔

اکبر کا کلیجہ حلقِ علی اصغر
عباس کے بازو زینب کا کھلا سر
یہ کہتے ہیں تجھ سے اے شام کے لشکر
سُنو زندہ ہے حُسین سُنو زندہ ہے حُسین
شاہ است حُسین ۔۔۔


مرقد سے نکل کر خود فاطمہ زہرا
مقتل کی زمیں پر دیتی رہی پہرہ
خنجر سے سناں سے کہتی رہی زہرا
سُنو زندہ ہے حُسین سُنو زندہ ہے حُسین
شاہ است حُسین ۔۔۔

زنجیرِ ستم نے رستہ نہیں روکا
پہنے ہوئے بیڑی چلتے رہے مولا
کہتا ہے ابھی تک سجاد کا سجدہ
سُنو زندہ ہے حُسین سُنو زندہ ہے حُسین
شاہ است حُسین ۔۔۔

اعدائ کے تماچے رُخسارِ سکینہ
جلتا ہوا دامن گرمی کا مہینہ
کہتی تھی پھوپھی سے ہر ایک سے کہنا
سُنو زندہ ہے حُسین سُنو زندہ ہے حُسین
شاہ است حُسین ۔۔۔

بیمارِ مدینہ وہ فاطمہ صُغرا
دروازے پہ بیٹھی تکتی ہے جورستہ
خود کو یہی کہہ کر دیتی ہے دلاسا
سُنو زندہ ہے حُسین سُنو زندہ ہے حُسین
شاہ است حُسین ۔۔۔

سرور سرِ مجلس ذکرِ شاہِ والا
ریحان مسلسل اس غم کا حوالا
دوہراتا ہے ہر دم تاریخ کا جملہ
سُنو زندہ ہے حُسین سُنو زندہ ہے حُسین
شاہ است حُسین ۔۔۔


sha ast hussain badshah ast hussain
deen ast hussain deen panah ast hussain

sar daad na daad dast dar daste yazeed
haqqa ke bina la illaaha ast hussain

sardaro shehenshah ay shahe shaheedan
qaari sare naiza ay waarise quran
kehti hai namazay ab tak sare maidan        
suno zinda hai hussain suno zinda hai hussain
sha ast hussain....

azaaon namaaze milad-e-mohammed
ye majlis-o-matam abbas ka parcham
kehti hai sabilein kehta hai moharram
suno zinda hai hussain suno zinda hai hussain
sha ast hussain....

akbar ka kaleja halq-e-ali asghar
abbas ke baazu zainab ka khula sar
ye kehte hain tujhse ay shaam ke lashkar
suno zinda hai hussain suno zinda hai hussain
sha ast hussain....

marqad se nikal kar khud fatema zehra
maqtal ki zameen par deti rahi pehra
khanjar se sina se kehti rahi zehra
suno zinda hai hussain suno zinda hai hussain
sha ast hussain....

zanjeer-e-sitam ne rasta nahi roka
pehne huwe baydi chalte rahe maula
kehta hai abhi tak sajjad ka sajda
suno zinda hai hussain suno zinda hai hussain
sha ast hussain....

aada ke tamache rukhsaare sakeena
jhalta huwa damaan garmi ka mahina
kehti thi phuphi se har ek se kehna
suno zinda hai hussain suno zinda hai hussain
sha ast hussain....

beemare madina woh fatema sughra
darwaze pe baithi takti hai jo rasta
khud ko yehi kehkar deti hai dilasa
suno zinda hai hussain suno zinda hai hussain
sha ast hussain....

sarwar sare majlis zikre shahe wala
rehaan musalsal is gham ka hawala
dohrata hai har dam tareeq ka jumla
suno zinda hai hussain suno zinda hai hussain
sha ast hussain....
Noha - Shah Ast Hussain
Shayar: Rehaan Azmi
Nohaqan: Nadeem Sarwar
Download Mp3
Listen Online