صلوٰۃ و سلام آپ پہ یا فاطمہ زہرا
پُرسے کے لیئے آئے ہیں یا فاطمہ زہرا

ہو لاکھ دورود آپ پہ شہزادیئِ کونین
غم اتنے سہے آپ نے اے مادرِ حثنین
مرقد میں بھی اعدائ نے نہیں لینے دیا چین
از بعدِ محمد رہے لب پر تیرے یہ بین
افلاک بھی تھرّائے ہیں یا فاطمہ زہرا
صلوٰۃ و سلام آپ پہ۔۔۔

جب چاند محرم کا نظر آتا ہے بی بی
شبیر کا تب یاد سفر آتا ہے بی بی
عاشور کا منظر ہمیں رُلواتا بی بی
اُجڑا جو نظر آپ کا گھر آتا ہے بی بی
ہم نوحہ کناں آئے ہیں یا فاطمہ زہرا
صلوٰۃ و سلام آپ پہ۔۔۔

عاشور کی وہ صبحِ اذانِ علی اکبر
چلتے ہوئے وہ تیر عبادت کا وہ منظر
خیمے میں پریشان تھی زینب تیری دختر
اور پیاس سے گہوارے میں روتا رہا اصغر
ہم بھول نہیں پائے ہیںیا فاطمہ زہرا
صلوٰۃ و سلام آپ پہ۔۔۔

زینب کے پسر عو ن ومحمدکی شہادت
خاموشی سے زینب نے سہی تھی وہ قیا مت
نہ اشک بہائے نہ کی آوازِ میرے سد
دریا پہ جو جانے کی نہ تھی ماں کی اجازت
پیاسے ہی پلٹ آئے ہیں یا فاطمہ زہرا
صلوٰۃ و سلام آپ پہ۔۔۔

اک گھٹری میں اک چاند سے قاسم کا جنازہ
میدان سے جب خیمہ فرواہ میں آیا
سب بہنیں بُکا کرتیں تھیں دلہن کا تھا نوحہ
کب خون کی مہندی سے سجا ہے کوئی دولہا
شہ درد سے تھرّائے ہیںیا فاطمہ زہرا
صلوٰۃ و سلام آپ پہ۔۔۔

کس طرح لکھی جائے علمدار کی رخصت
یافاطمہ زہرا نہیں الفاظ میں طاقت
پیاسوں کے کلیجے پہ گر ا کوہے مصیبت
جاتی رہی تب بازوئے شبیر کی قوّت
جب مشک و علم لائے ہیںیا فاطمہ زہرا
صلوٰۃ و سلام آپ پہ۔۔۔

لیلیٰ نے سنوارا علی اکبر کو یہ کہکر
دن بیاہ کے ہیں پھر بھی سدھارو میرے دلبر
شرمندہ محمد سے نہ ہو جائے یہ مادر
دم نادِعلی کردوں تیرے سینے کے اُپر
گل سہرے کے مرجھائے ہیں یا فاطمہ زہرا
صلوٰۃ و سلام آپ پہ۔۔۔

جب تیروں کی برسات میں گھر سے گئے اصغر
ماں کہتی تھی پانی اِسے دے دینگے ستمگر
معلوم نہ تھا تیر ہے اصغر کا مقدر
تڑپے گا ابھی باپ کے ہاتھوں پہ یہ دلبر
شہہ لاشہ اُٹھا لائے ہیںیا فاطمہ زہرا
صلوٰۃ و سلام آپ پہ۔۔۔

جب گردنِ شبیر پہ چلنے لگا خنجر
خود آپ تو موجود تھیں وہاں بنتِ پیمبر
ماں کہہ کے صدا دیتا تھا جب آپ کو دلبر
جنت سے چلے آئے تھے جب دشت میں حیدر
ہم رونے کو یاں آئے ہیںیا فاطمہ زہرا
صلوٰۃ و سلام آپ پہ۔۔۔

اے کاشف و ریحان پسِ شامِ غریباں
سیدانیاں روتی تھیں لرزتا تھا بیاباں
جلتے ہوئے خیموں کا دھواں بر سرِ میداں
اک بچی کا شعلوں میں سُلگتا ہوا دامن
دل درد سے بھر آئے ہیںیا فاطمہ زہرا
صلوٰۃ و سلام آپ پہ۔۔۔


salwat-o-salam aap pe ya fatima zahra
purse ke liye aaye hai ya fatima zahra

ho laakh darood aap pe shehzadiye kaunain
gham itne sahe aap ne ay madare hasnain
markhad may bhi aada ne nahi lene diya chain
azbaad mohammad rahe lab par tere bain
aflaak bhi tharraye hai ya fatima zahra
salwat-o-salam aap pe....

jab chand moharram ka nazar aata hai bibi
shabbir ka tab yaad safar aata hai bibi
ashoor ka manzar hame rulwata hai bibi
ujda jo nazar aap ka ghar aata hai bibi
hum nowhaquna aaye hai ya fatima zahra
salwat-o-salam aap pe....

ashoor ki wo subhe azane ali akbar
chalte hue wo teer ibadar ka wo manzar
qaime may pareshaan thi zainab teri dukhtar
aur pyas se gehware may rota raha asghar
hum bhool nahi paaye hai ya fatima zahra
salwat-o-salam aap pe....

zainab ke pisar aun-o-mohammed ki shahadat
khamoshi se zainab ne sahi thi wo qayamat
na ashk bahaye na ki awaaz mere sad
darya pe jo jaane ki na thi maa ki ijazat
pyase hi palat aaye hai ya fatima zahra
salwat-o-salam aap pe....

ek ghatri may ek chand se qasim ka janaza
maidan se jab qaimaye fargha misa aaya
sab behne buka karti thi dulhan ka tha nowha
kab khoon ki mehndi se saja hai koi dulha
sheh dard se tharraye hai ya fatima zahra
salwat-o-salam aap pe....

kis tarha likhi jaaye alamdar ki ruqsat
ya fathima zehra nahi alfaaz may taaqat
pyaso ke kaleje pe gira kohe musibat
jaati rahi tab baazue shabbir ki quwwat
jab mashqo alan laaye hai ya fatima zahra
salwat-o-salam aap pe....

laila ne sawara ali akbar ko ye kehkar
din byah ke hai phir bhi sidharo mere dilbar
sharminda mohammad se na ho jaaye ye madar
dam nade ali kar doon tere seene ke upar
gul sehre ke murjhaye hai ya fatima zahra
salwat-o-salam aap pe....

jab teero ki barsaat may ghar se gaye asghar
maa kehti thi pani isay de denge sitamgar
maloom na tha teer hai asghar ka muqaddar
tadpega abhi baap ke haaton pe ye dilbar
sheh laasha utha laaye hai ya fatima zahra
salwat-o-salam aap pe....

jab gardane shabbir pe chalne laga khanjar
khud aap to maujood thi wahan binte payambar
maa kehke sada deta tha jab aap ko dilbar
jannat se chale aaye thay jab dasht may haider
hum rone ko yahan aaye hai ya fatima zahra
salwat-o-salam aap pe....

ay kashif-o-rehaan pase shame ghariban
saydaniya roti thi larazta tha bayaban
jalte hue qaimo ka dhuan bar sare maidan
ek bachi ko sholo may sulagta hua daaman
dil dard se bhar aaye hai ya fatima zahra
salwat-o-salam aap pe....
Noha - Salwat o Salam Aap Pe
Shayar: Rehaan Azmi
Nohaqan: Kashif Raza
Download Mp3
Listen Online