سجدئہ امتیاز ہو جائے
زیرِ خنجر نماز ہو جائے

کوئی پانی پلا کے قاتل کو
تجھ سا مہماں نواز ہو جائے
سجدئہ امتیاز ۔۔۔۔۔

جس نے کھائی ہو تیغ سجدے میں
اس پہ صدقے نماز ہو جائے
سجدئہ امتیاز ۔۔۔۔۔

جس جگہ تیرِ نقشِ پا بیٹھے
وہ زمیں سرفراز ہو جائے
سجدئہ امتیاز ۔۔۔۔۔

اک نمازی کے خونِ طاہر سے
سرخرو جا نماز ہو جائے
سجدئہ امتیاز ۔۔۔۔۔

اک نظر تیری ہو اگر مولا
مثلِ حُر سرفراز ہو جائے
سجدئہ امتیاز ۔۔۔۔۔

کھُل کے کرنا ہے ماتمِ سرور
یہ شبِ غم دراز ہو جائے
سجدئہ امتیاز ۔۔۔۔۔

دیکھنا تجھ کو حق پرستی ہے
بے وضو ہی نماز ہو جائے
سجدئہ امتیاز ۔۔۔۔۔

آرزو یا علی ہے مرزا کی
تیرے در کا ایاز ہو جائے
سجدئہ امتیاز ۔۔۔۔۔


sajdaye imtiyaz hojaye
zere khanjar namaz hojaye

koi pani pila ke qaatil ko
tujhsa mehman-nawaz hojaye
sajdaye imtiyaz....

jisne khayi ho taygh sajde may
ispe sadqe namaz hojaye
sajdaye imtiyaz....

jis jagah tere naqshe pa baithe
wo zameen sarfaraz hojaye
sajdaye imtiyaz....

ek namazi ke khoon-e-taahir se
surkh-roo janamaz hojaye
sajdaye imtiyaz....

ek nazar teri ho agar maula
misle hurr sarfaraz hojaye
sajdaye imtiyaz....

khul ke karna hai matame sarwar
ye shabe gham daraaz hojaye
sajdaye imtiyaz....

dekhna tujhko haq parasti hai
bewazoo hi namaz hojaye
sajdaye imtiyaz....

aarzoo ya ali hai mirza ki
tere dar ka ayaaz hojaye
sajdaye imtiyaz....
Noha - Sajdaye Imtiyaz
Shayar: Mirza Murtaza Ali
Nohaqan: Mirza Sikander Ali
Download Mp3
Listen Online