رن میں یہ کہتے تھے رو کے سرور
ہائے میرا عباس نہیں ہے

کیسے اُٹھائوں لاشِ اکبر
ہائے میرا عباس نہیں ہے

سینے سے برچھی کیسے نکالوں
پیری میں کیسے دل کو سنبھالوں
خوں میں تڑپتا ہے میرا دلبر
ہائے میرا عباس نہیں ہے
رن میں یہ کہتے ۔۔۔

رن میں تھے زینب کے یہ نالے
کوئی میرے بھائی کو بچالے
شمر چلاتا ہے کُند خنجر
ہائے میرا عباس نہیں ہے
رن میں یہ کہتے ۔۔۔

رن میں نہ ہوتا پامال سہرا
بیوہ نہ ہوتی مظلوم کبریٰ
ٹکڑے حسن کا ہوتا نہ دلبر
ہائے میرا عباس نہیں ہے
رن میں یہ کہتے ۔۔۔

چہرے کو بالوں سے ہے چھپائے
کہتی تھی زینب سر کو جھُکائے
سر سے میرے چھنتی نہ یہ چادر
ہائے میرا عباس نہیں ہے
رن میں یہ کہتے ۔۔۔


ran may ye kehte thay roke sarwar
haye mera abbas nahi hai

kaise uthaun laashaye akbar
haye mera abbas nahi hai

seene se barchi kaise nikaloo
peeri may kaise dil ko sambhaloo
khoon may tadapta hai mera dilbar
haye mera abbas nahi hai
ran may ye kehte....

ran may thay zainab ke ye naale
koi mere bhai ko bachale
shimr chalata hai kund khanjar
haye mera abbas nahi hai
ran may ye kehte....

ran may na hota pamaal sehra
bewa na hoti mazloom kubra
tukde hassan ka hota na dilbar
haye mera abbas nahi hai
ran may ye kehte....

chehre ko balon se hai chupayi
kehti thi zainab sar ko jhukayi
sar se mere chinti na ye chadar
haye mera abbas nahi hai
ran may ye kehte....
Noha - Ran May Ye Kehte

Nohaqan: Tableeq e Imamia (Nazim Hussain)
Download Mp3
Listen Online