قاسم کی لاش لے کر آتے ہیں رن سے سرور
ہے خیمہ گاہ میں محشر آتے ہیں رن سے سرور

دولہا جسے بنا کر بھیجا تھا رن میں مادر
لاشہ اُسی کا لے کر آتے ہیں رن سے سرور
قاسم کی لاش ۔۔۔۔۔

خیموں میں جا کے کہہ دو مسند کوئی بچھائو
دولہا کی لاش اُٹھا کر آتے ہیں رن سے سرور
قاسم کی لاش ۔۔۔۔۔

وہ گرم ریگ صحرا پامال گُل سا لاشہ
روتی ہے روحِ شبر آتے ہیں رن سے سرور
قاسم کی لاش ۔۔۔۔۔

یوں ڈھونڈتے ہیں ٹکڑے جیسے ہیں پھول چُنتے
رن میں عبا بچھا کر آتے ہیں رن سے سرور
قاسم کی لاش ۔۔۔۔۔

دولہن شیقاب دیکھے لاشے کے یوں نہ ٹکڑے
زیرِ عبا چھپا کر آتے ہیں رن سے سرور
قاسم کی لاش ۔۔۔۔۔

مومن حرم میں غُل تھا وا قاسمَ کا برپا
کیا سخت تھا وہ منظر آتے ہیں رن سے سرور
قاسم کی لاش ۔۔۔۔۔


qasim ki laash lekar aate hai ran se sarwar
hai khaimagah may mehshar aate hai ran se sarwar

dulha jise banakar bheja tha ran may maadar
laasha usi ka lekar aate hai ran se sarwar
qasim ki laash....

khaimo may jaake kehdo masnad koi bichao
dulha ki laash uthakar aate hai ran se sarwar
qasim ki laash....

wo garm rayg sehra pamaal gul sa laasha
roti hai roohay shabbar aate hai ran se sarwar
qasim ki laash....

yun dhoondte hai tukde jaise hai phool chunte
ran may aba bichkar aate hai ran se sarwar
qasim ki laash....

dulhan shikaab dekhe laashe ke yun na tukde
zere aba chipakar aate hai ran se sarwar
qasim ki laash....

momin haram may ghul tha wa qasima ka barpa
kya sakt tha wo manzar aate hai ran se sarwar
qasim ki laash....
Noha - Qasim Ki Laash Lekar

Nohaqan: Groh e Kazm
Download Mp3
Listen Online