نہ رو نہ رو نہ رومعصوم سکینہ
زندان میں اب یاد نہ کر بابا کا سینہ

چاروں سمت اندھیرا پاس نہیں کوئی
اب تو غازی کی بھی آس نہیں کوئی
کون سُنے فریاد یںہے دور مدینہ
نہ رو نہ رو ۔۔۔

تجھ کو قید نہ ملتی گر تنہائی کی
بیماری نہ بڑھتی تیرے بھائی کی
روتا خون آنکھوں سے سجاد کبھی نہ
نہ رو نہ رو ۔۔۔

بی بی تیری ماں کو اک پل چین نہیں
زینب و کلثوم کے رُکتے بین نہیں
گود رباب کی اُجڑی آباد ہوئی نہ
نہ رو نہ رو ۔۔۔

یاد اسے بابا کی جب تڑپاتی ہے
سر اپنا دیواروں سے ٹکراتی ہے
رو رو کے کہتی ہے دشوار ہے جینا
نہ رو نہ رو ۔۔۔


na ro na ro na ro masoom sakina
zindaan may ab yaad na kar baba ka seena

charon simt andhera paas nahi koi
ab to ghazi ki bhi aas nahi koi
kaun sune faryade hai door madina
na ro na ro....

tujko qaid na milti gar tanhai ki
beemari na badti tere bhai ki
rota khoon aankhon se sajjad kabhi na
na ro na ro....

bibi teri maa ko ek pal chain nahi
zainab-o-kulsoom ka rukte bain nahi
godh rubab ki ujri abaad huwi na
na ro na ro....

yaad usay baba ki jab tadpaati hai
sar apna deewaron se takraati hai
ro ro ke kehti hai dushwar hai jeena
na ro na ro....
Noha - Na Ro Na Ro

Nohaqan: Hasan Sadiq
Download Mp3
Listen Online