مجھ پہ کیوں بند کرتے ہو پانی
کیا محمد کا پیارا نہیں ہوں
مجھ کیوں بند کرتے ہو پانی،کلمہ گویو محمد کے شامی
کیا میں مہمان آیا نہیں ہوں،کیا میں زہرا کا جایانہیں ہوں
مجھ پہ کیوں بند کرتے ہو پانی ۔۔۔

میرا بابا ہے مشکل کشائ،میری مادر بھی ہیں سیدہ
میرا بیٹا ہے ذین العبا،میرے نانا کا کلمہ پڑھا
جس کے سائے کو تم ڈھونڈتے ہو،کیا میں اُس کا ہی سایہ نہیں ہوں
مجھ پہ کیوں بند کرتے ہو پانی ۔۔۔

تم نے مکطوب لکھے کئی،آئیے جلد ابنِ علی
دین کی روشنی کم ہوئی،شمعِ اسلام بجھنے لگی
تم نے چاہا تھا میں آ گیا ہوں،خود مدینے سے آیا نہیں ہوں
مجھ پہ کیوں بند کرتے ہو پانی ۔۔۔

دسترس میں میری کیا نہیں،علم تقویٰ شجاعت یقیں
میرے پیروں کے نیچے زمیں، جس پہ رکھیں فرشتے جبیں
میں ہی سردارِاہلِ جناں ہوں،کوئی ٹوٹا ستارا نہیں ہوں
مجھ پہ کیوں بند کرتے ہو پانی ۔۔۔

میری گردن پہ خنجر چلے،آگ لگتی ہے گھر میں لگے
بنتِ زہرا کی چادر چھنے،ہاتھ دوں گا نہ اپنا تجھے
ہاتھ میرا یہ دستِ خدا ہے،میں تو منکر خدا کا نہیں ہوں
مجھ پہ کیوں بند کرتے ہو پانی ۔۔۔

ساتھ زہرا کی ہیں بیٹیاں،محترم ان سا کوئی کہاں
پیاس کی دھوپ کی سختیاں،سب کے چہرے ہوئے ہیں دھواں
بیٹیاں فاطمہ کی ہیں پیاسی،صرف اک میں ہی پیاسا نہیں ہوں
مجھ پہ کیوں بند کرتے ہو پانی ۔۔۔

حکم عباس کو دوں گا اگر،نہر لے آئے وہ چھین کر
کربلا ہو گی زیر و زبر،لاشیں تیریں گی ہر موج پر
میں نہیں چاہتا جنگ کرنا،فوج لڑنے کو لایا نہیں ہوں
مجھ پہ کیوں بند کرتے ہو پانی ۔۔۔

گونجی ھل من کی ایسی صدا،شہہ کو ریحان کہتے سنا
یا علی یا علی عیلیا،وقت امداد کا آ گیا
میرے بچے بلکتے ہیں پیاسے،پھر بھی کیا مسکرایا نہیں ہوں
مجھ پہ کیوں بند کرتے ہو پانی ۔۔۔


mujhpe kyun bandh karte ho pani
kya mohammad ka pyara nahi hoo
mujhpe kuyn bandh karte ho pani, kalmagoyo mohammad ke shaami
kya mai mehmaan aaya nahi hoo, kya mai zehra ka jaaya nahi hoo
mujhpe kyun bandh karte ho pani....

mera baba hai mushkil kusha, meri maadar bhi hai sayyeda
mera beta hai zainul-liba, mere nana ka kalma padha
jiskei saaye ko tum dhoondhte ho, kya mai uska hi saaya nahi hoo
mujhpe kyun bandh karte ho pani....

tum ne maktub likhe kayi, aaiye jald ibn-e-ali
deen ki roshni kam huvi, shamm-e-islam bujhne lagi
tum ne chaha tha mai aagaya hoo, khud madine se aaya nahi hoo
mujhpe kyun bandh karte ho pani....

dast rast may meri kya nahi, ilm taqwa shuja-at yaqeen
mere pairon ke niche zameen, jispe rakhe farishte jabeen
mai hi sardar-e-ahl-e-jina hoo, koi toota sitara nahi hoo
mujhpe kyun bandh karte ho pani....

meri gardan pe khanjar chale, aag lagti hai ghar may lagay
bint-e-zehra ki chadar chinay, haath doonga na apna tujhe
haath mera yeh dast-e-khuda hai, mai to munkir khuda ka nahi hoo
mujhpe kyun bandh karte ho pani....

saath zehra ki hai betiyaan, mohtaram insa koi kahan
pyaas ki dhoop ki saqhtiyaan, sabke chehre huway hai dhuaan
betiyaan fatema ki hai pyasi, sirf ek mai hi pyaasa nahi hoo
mujhpe kyun bandh karte ho pani....

hukm abbas ko doon agar, nehr le aaye wo cheen kar
karbala hogi zer-o-zabar, lashein tairegi har mouj par
mai nahi chahta jung karna, fauj ladne ko laaya nahi hoo
mujhpe kyun bandh karte ho pani....

goonji hal-min ki aisi sada, sheh ko rehaan kehte suna
ya ali ya ali aeliyaa, waqt imdaad ka aa gaya
mere bache bilakte hain pyase, phir bhi kya muskuraya nahi hoo
mujhpe kyun bandh karte ho pani....
Noha - Mujhpe Kyon Bandh
Shayar: Rehaan Azmi
Nohaqan: Nadeem Sarwar
Download Mp3
Listen Online