مقتل میں خوں سے لعل ہے بانو کا نونہال
مقتل میں خوں

ابرو ہی حسین کی پلکیں حسین کی
تیور وہی حسین کے آنکھیں حسین کی
آئینہ جمال ہے بانو کا نونہال
مقتل میں خوں

سوکھے لبوں کے گرد وہ چہرے کی آب و تاب
ہمت نہیں کسی میں کوئی بڑھ کے دے جواب
شبیر کا سوال ہے بانو کا نونہال
مقتل میں خوں

اللہ رے وہ تیری تبسم بھری نگاہ
اک آن میں صفیں ہی پلٹ دے خدا گوایہ
ہیبت میں اک جلال ہے بانو کا نونہال
مقتل میں خوں

تیرا لہو زمین پر گرنے نہیں دیا
بہتے لہو کو شاہ نے چہرے پہ مل لیا
یکتا دم قتال ہے بانو کا نونہال
مقتل میں خوں

بانو کی سمت جائے تو کس طرح سے حسین
پلٹے ہیں سات بار در خیمہ سے حسین
ہاتھوں پہ نونہال ہے بانو کا نونہال
مقتل میں خوں

اٹھتا ہے شور گریہ جو اک خیمہ گاہ سے
سب بن کا بن لرزتا ہے بانو کی آہ سے
اک تیر سا نڈھال ہے بانو کا نونہال
مقتل میں خوں


maqtal may khoon se laal hai bano ka nownehaal
maqtal may khoon....

abroo wohi hussain ke palke hussain ki
tewar wohi hussain ke aankhein hussain ki
aayena-e-jamaal hai bano ka nownehaal
maqtal may khoon....

sukhe labon ke gird wo chehre ki aabo taab
himmat nahi kisi may koi badke de jawaab
shabbir ka sawaal hai bano ka nownehaal
maqtal may khoon....

allah re wo teri tabassum bhari nigaah
ek aan may safay hi palat di khuda gawah
haybat may ek jalaal hai bano ka nownehaal
maqtal may khoon....

tera lahoo zameen par girne nahi diya
behte lahoo ko shaah ne chehre pe mal-liya
yaqta dame khitaal hai bano ka nownehaal
maqtal may khoon....

bano ki samt jaaye to kis tarha se hussain
palte hai saath baar dare qaime se hussain
haaton pe nownehaal hai bano ka nownehaal
maqtal may khoon....

uth-ta hai shore girya jo ek qaime gaah se
sab ban ka ban larazta hai bano ki aah se
ek teer se nidhaal hai bano ka nownehaal
maqtal may khoon....
Noha - Maqtal May Khoon Se

Nohaqan: Ali Zia Rizvi
Download Mp3
Listen Online