میں جہاد کر رہا ہوں میری تیغ چشم تر ہے
میرے دشمنوں کو ہر دم میرے آنسوئوں سے ڈر ہے

یہ علم میرا تصدق یہ علم میرا تعارف
اور اسی کے زیر سایہ میرے فقط کا سفر ہے
میں جہاد کر رہا ہوں

جو ہوا ہے کربلا میں وہ لکھا گیا بہت کم
جو چھپائے ہے مظالم وہ مورخ کا شر ہے
میں جہاد کر رہا ہوں

میرے آنسوئوں نے پھر تو یہ بساط ہی الٹ دی
وہ حسینیوں کے دل میں نہ تو خوف ہے نہ ڈر ہے
میں جہاد کر رہا ہوں

مگر اتنا یاد رکھیں کہ ہے غیب میں جو قائم
ہمیں انتظار اس کا وہ ہمارا ہمسفر ہے
میں جہاد کر رہا ہوں

وہ جب آئے گا زمین پر تو پھر انتقام لے گا
میرا ایک ایک لمحہ بس اسی کے نام پر ہے
میں جہاد کر رہا ہوں

تجھے اے لعین خبر ہے کہ یہ کون خون میں تر ہے
جسے ذبح کر رہا ہے وہ رسول کا پسر ہے
میں جہاد کر رہا ہوں

وہ جو کہنیوں کے بل پر کسی لاشے پر ہے آیا
وہ سناں بھی کھینچ لے گا کہ جوان کا پدر ہے
میں جہاد کر رہا ہوں

وہ لہو فلک کی عظمت وہ لہو زمین کی حرمت
رخ شہہ پہ جو سجا ہے وہ لہو عظیم تر ہے
میں جہاد کر رہا ہوں

یہ مکائے حرف شاہد میرے پاس ہے امانت
کہ فروغ دوں عزا کو یہی منصب ہنر ہے
میں جہاد کر رہا ہوں


mai jihad kar raha hoo meri taygh chashme tar hai
meri dushmano ko har dam mere aansuon se darr hai

ye alam mera tasaddusk ye alam mera ta-arruf
aur isis ke zere saaya mere faqt ka safar hai
mai jihad kar....

jo hua hai karbala may wo likha gaya bahot kam
jo chupaye hai ma zaalim wo mo-arriqo ka shar hai
mai jihad kar....

mere aansuon ne phir to ye bisaak hi ulat di
wo hussainiyo ke dil may na na to khauf hai na darr hai
mai jihad kar....

magar itna yaad rakhan ke hai qaid may jo qayam
hame intezaar uska wo hamara muntazar hai
mai jihad kar....

wo jab aayega zameen par to phir inteqam lega
mera ek ek lamha bas usi ke naam par hai
mai jihad kar....

tujhe ay layeen khabar hai ke ye kaun khoon may tar hai
jise zibha kar raha hai wo rasool ka pisar hai
mai jihad kar....

wo jo koniyo ke bal par kisis laashe par hai aaya
wo sina bhi khaynch lega ke jawan ka padar hai
mai jihad kar....

wo lahoo falak ki azmat wo lahoo zameen ki hurmat
rukhe sheh pe jo saja hai wo lahoo azeem tar hai
mai jihad kar....

ye makaye harf shahid mere paas hai amanat
ke farogh doo aza ko yehi mansabe hunar hai
mai jihad kar....
Noha - Mai Jihad Kar Raha
Shayar: Shahid Jafer
Nohaqan: Murtaza/Riaz
Download mp3
Listen Online