لشکرِ شاہِ دیں اُداس نہیں
کُل بہتر ہیں اور ہے راس نہیں

ہوش قاسم کی جنگ نے کھوئے
بے سرِ سب کے ہواس نہیں
لشکرِ شاہِ ۔۔۔۔۔

دل سے باتیں یہ کرتی تھی صغرا
شاہ آئیں سفر سے آس نہیں
لشکرِ شاہِ ۔۔۔۔۔

یوں لُٹائے شِہ کے بعد اہلِ حرم
اِک چادر کسی کے پاس نہیں
لشکرِ شاہِ ۔۔۔۔۔

رَن میں اصغر کو لے چلے ہیں حُسین
چھائوں تیروں کی ان کو راس نہیں
لشکرِ شاہِ ۔۔۔۔۔

قبرِ اصغر پہ ماں یہ کہتی تھی
کیوں میری جان اب تو پیاس نہیں
لشکرِ شاہِ ۔۔۔۔۔

قبر تنہائی اور علی اصغر
ماں بہن کوئی آس پاس نہیں
لشکرِ شاہِ ۔۔۔۔۔

آل و قُر آن پہ ہے بِنا حامد
اپنا ایماں بے اساس نہیں
لشکرِ شاہِ ۔۔۔۔۔  


lashkare shahe deen udas nahi
kul bahattar hai aur hai raas nahi

hosh qasim ki jang ne khoye
be sare sab ke hawas nahi
lashkare shahe....

dil se baatein ye karti thi sughra
shah aaye safar se aas nahi
lashkare shahe....

yun lutay sheh ke baad ahle haram
ek chadar kisi ke paas nahi
lashkare shahe....

ran may asghar ko le chale hai hussain
chaon teeron ki inko raas nahi
lashkare shahe....

qabre asghar pe maa ye kehti thi
kyun meri jaan ab to pyaas nahi
lashkare shahe....

qabr tanhai aur ali asghar
maa behan koi aas paas nahi
lashkare shahe....

aal o quran pe hai bina hamil
apna emaan be-asaas nahi
lashkare shahe....
Noha - Lashkare Shahe Deen

Nohaqan: Sachey Bhai
Download Mp3
Listen Online