لاشِ اکبر اُٹھا رہے ہیں حُسین
کر لو روشن کہ آ رہے ہیں حُسین
لاشِ اکبر ۔۔۔۔۔

جس جگہ رکھ رہے ہیں پیشانی
فخرِ کعبہ بنا رہے ہیں حُسین
لاشِ اکبر ۔۔۔۔۔

لڑکھڑائے ہیں انبیائ کے قدم
جس جگہ مُسکرا رہے ہیں حُسین
لاشِ اکبر ۔۔۔۔۔

دو صدا ہو کہاں علی اکبر
ٹھوکریں رَن میں کھا رہے ہیں حُسین
لاشِ اکبر ۔۔۔۔۔

جائو خیمے میں جائو اے زینب
لاش اکبر کی لا رہے ہیں حُسین
لاشِ اکبر ۔۔۔۔۔

آہ کرتے ہیں بیٹھ جاتے ہیں
کس کا لاشہ اُٹھا رہے ہیں حُسین
لاشِ اکبر ۔۔۔۔۔

چُن کے قاسم کی لاش کے ٹُکڑے
اپنے دامن میں لا رہے ہیں حُسین
لاشِ اکبر ۔۔۔۔۔

دل کی قوت دِکھا رہے ہیں حُسین
لاشِ اکبر ۔۔۔۔۔


laashe akbar utha rahe hai hussain
karlo roshan ke aa rahe hai hussain
laashe akbar....

jis jagah rakh rahe hai peshani
faqre kaaba bana rahe hai hussain
laashe akbar....

ladkhadaye hai ambiya ke qadam
jis jagah muskura rahe hai hussain
laashe akbar....

do sada ho kahan ali akbar
thokare ran may kha rahe hai hussain
laashe akbar....

jao qaime may jao ay zainab
laash akbar ki laa rahe hai hussain
laashe akbar....

aah karte hai baith jaate hai
kiska laasha utha rahe hai hussain
laashe akbar....

chunke qasim ki laash ke tukhde
apne daman may laa rahe hai hussain
laashe akbar....

dil ki quwwat dikha rahe hai hussain
laashe akbar....
Noha - Laashe Akbar Utha

Nohaqan: Sachey Bhai
Download Mp3
Listen Online