کربلا میں روز عاشورہ فضا ٹھہری رہی
وہ تشنہ لب کا معجزہ ٹھہری رہی

اس کے دامن میں نہ جانہ سانحہ کیا ہو گیا
عالم سکتہ میں ہر عالقامہ ٹھہری رہی
کربلا میں روز عاشورہ

آگئے مشک و علم تو خیمہ گاہ شاہ میں
دور ساحل پر بپا کوئی فضا ٹھہری رہی
کربلا میں روز عاشورہ

ماں پھوپھی تو آگئی ابن حسن کی لاش پر
فاطمہ کبٰری وہاں بند حیا ٹھہری رہی
کربلا میں روز عاشورہ

کیا زمانے میں کوئی اس طرح کی بیوہ بھی ہے
ہاتھ میں کنگن نہیں ٹھہرے حنا ٹھہری رہی
کربلا میں روز عاشورہ

ظالموں نے سر سے زینب کے ردا تو چھین لی
ہاں مگر تطہیر کی منصف ردا ٹھہری رہی
کربلا میں روز عاشورہ

آگئی خیمے میں واپس شہہ کے کہنے سے رباب
دیر تک خیمے کے در پر ماں اداس ٹھہری رہی
کربلا میں روز عاشورہ

تعزیے اٹھے علم اٹھے اٹھا فرش عزا
جس جگہ مجلس بپا تھا فاطمہ ٹھہری رہی
کربلا میں روز عاشورہ


karbala may roze ashoora fiza tehri rahi
wo tashnalab ka maujiza tehri rahi

uske daman may na jaane saaniha kya hogaya
aalame sakta may nehre alqama tehri rahi
karbala may....

aagaye mashk-o-alam to qaimagahe shaah may
door saahil par bapa koi fiza tehri rahi
karbala may....

maa phuphi to aagayi ibne hassan ki laash par
fatema sughra bapa bande haya tehri rahi
karbala may....

kya zamane may koi is tarha ki bewa bhi hai
haath may kangan nahi tehre hina tehri rahi
karbala may....

zaalimo ne sar se zainab ke rida to cheen li
haan magar tatheer ki munsif rida tehri rahi
karbala may....

aagayi qaime may wapas sheh ke kehne se rabab
dayr tak qaime ke dar par maa udaas tehri rahi
karbala may....

taaziye uth-thay alam uth-thay uth-tha farshe aza
jis jagah majlis bapa thi fatema tehri rahi
karbala may....
Noha - Karbala May Roze

Nohaqan: Ali Zia Rizvi
Download Mp3
Listen Online