اے منتقم کب آئو گے اے منتظر کب آئو گے

زہرا کی اندھیری تربت پہ کب شمع جلانے آئو گے
ٹوٹی ہوئی قبروں کو مولا کس روز بنانے آئو گے
اے منتقم کب آئو گے۔۔۔
زہرا کی اندھیری۔۔۔۔

بے شیر کی ننھی میت کو تربت سے نکالا تھا جس نے
کب اُس کے لاشے کو مولا نیزے پہ اُٹھانے آئو گے
اے منتقم کب آئو گے۔۔۔
زہرا کی اندھیری۔۔۔۔

ہے چار برس کی اک زہرا زندان میں صدیوں سے قیدی
کب بیت الحُزن سے تم اُس کو آزاد کرانے آئو گے
اے منتقم کب آئو گے۔۔۔
زہرا کی اندھیری۔۔۔۔

ڈھایا گیا روضہ دادی کا دیکھا ہے اُجڑتا سامرہ
جو داغ ملے ہیں غیبت میں کب اُن کو دیکھانے آئو گے
اے منتقم کب آئو گے۔۔۔
زہرا کی اندھیری۔۔۔۔

وہ شام اور کوفہ کی یہ ستم وہ ناقوں سے گرتے بچے
ہے کون کہاں پر دفن ہوا کب نام بتانے آئو گے
اے منتقم کب آئو گے۔۔۔
زہرا کی اندھیری۔۔۔۔

معصومہئِ قم اور مولا رضا ہم شکلِ پیمبر اور صغرا
یہ بھائی بہن ہیں بچھڑے ہوئے کب اُن کو ملانے آئو گے
اے منتقم کب آئو گے۔۔۔
زہرا کی اندھیری۔۔۔۔

بیٹوں کے جنازوں پر اکبر اکبر کے لئے جو روتی ہے
کب اُجڑی ہوئی اُن مائوں کو انصاف دلانے آئو گے
اے منتقم کب آئو گے۔۔۔
زہرا کی اندھیری۔۔۔۔


ay muntakim kab aaoge ay muntazir kab aaoge

zehra ki andheri turbat pe kab shamma jalane aaoge
tooti hui qabro ko maula kis roz banane aaoge
ay muntakim kab aaoge....
zehra ki andheri....

baysheer ki nanhi mayyat ko turbat se nikaala tha kisne
kab uske laashe ko maula naize pe uithaane aaoge
may muntakin kab aaoge....
zehra ki andheri....

hai chaar baras ki ek zehra zindan may sadiyo se qaidi
kab baitul huzn se tum usko azaad karane aaoge
ay muntakim kab aaoge....
zehra ki andheri....

dhayagay rauza dadi ka dekha hai ujadta samarra
jo daagh milay hai ghaibat may kab unko dikhane aaoge
ay muntakim kab aaoge....
zehra ki andheri....

wo shaam aur koofa ke ye sitam wo naaqo se girte bache
hai kaun kahan par dafn hua kab naam batane aaoge
ay muntakim kab aaoge....
zehra ki andheri....

masooma e qum aur maula raza humshakle payambar aur sughra
ye bhai behan hai bichde hue kab unko milane aaoge
ay muntakim kab aaoge....
zehra ki andheri....

beton ke janazon par akbar akbar ke liye jo roti hai
kab ujdi hui un maaon ko insaf dillane aaoge
ay muntakim kab aaoge....
zehra ki andheri....
Noha - Kab Shamma Jalane
Shayar: Hasnain Akbar
Nohaqan: Mir Hassan Mir
Download Mp3
Listen Online