جھولا تیرا خالی ہے پریشاں ہے مادر
میں ہاتھوں کو پھیلاتی ہوں آ جا علی اصغر

نازک ہے گلا تیرا تُو پیاسا بھی بہت ہے
آ پیش کروں تجھ کو میں اشکوں کا سمندر
میں ہاتھوں کو پھیلاتی ہوں آ جا علی اصغر
جھولا تیرا خالی ہے ۔۔۔۔۔

اب رات ہوئی لوٹ کے گھر کیوں نہیں آیا
جنگل ہے بیابان ہے رونا نہیں ڈر کر
میں ہاتھوں کو پھیلاتی ہوں آ جا علی اصغر
جھولا تیرا خالی ہے ۔۔۔۔۔

مقتل میں تو برسات ہے تیروں کی میری جاں
پانی تجھے تیروں سے پلائیں گے ستم گر
میں ہاتھوں کو پھیلاتی ہوں آ جا علی اصغر
جھولا تیرا خالی ہے ۔۔۔۔۔

مقتل کی ہوا کیسی خبر لائی ہے بیٹا
سُنتی ہوں کہ اک تیر لگا تیرے گلے پر
میں ہاتھوں کو پھیلاتی ہوں آ جا علی اصغر
جھولا تیرا خالی ہے ۔۔۔۔۔

معصوم مجاہدنے لادی جنگ جو ریحان
ہتھیار تھا اک تیر تبسم کا لبوں پر
میں ہاتھوں کو پھیلاتی ہوں آ جا علی اصغر
جھولا تیرا خالی ہے ۔۔۔۔۔


jhoola tera khaali hai pareshan hai madar
mai haaton ko phailati hoo aaja ali asghar

nazuk hai gala tera tu pyasa bhi bahot hai
aa pesh karoo tujko mai ashkon ka samandar
mai haaton ko phailati hoo aaja ali asghar
jhoola tera khaali hai....

ab raat hui laut ke ghar kyon nahi aaya
jangal hai biyabaan hai rona nahi dar kar
mai haaton ko phailati hoo aaja ali asghar
jhoola tera khaali hai....

maqtal may to barsaat hai teero ki meri jaan
pani tujhe teero se pilayenge sitamgar
mai haaton ko phailati hoo aaja ali asghar
jhoola tera khaali hai....

maqtal ki hawa kaisi khabar laayi hai beta
sunti hoo ke ek teer laga tere galay par
mai haaton ko phailati hoo aaja ali asghar
jhoola tera khaali hai....

masoom mujahid ne ladi jang jo rehaan
hatyaar tha ek teer tabassum ka labon par
mai haaton ko phailati hoo aaja ali asghar
jhoola tera khaali hai....
Noha - Jhoola Tera Khaali
Shayar: Rehaan Azmi
Nohaqan: Hasan Sadiq
Download Mp3
Listen Online