حیٰ علٰی خیرالعمل
ہے وقت ابھی نادان سنبھل
قدرت کا ہے قانون اٹل
میزانِ مودت پر کل کو
تُل جائے گا ایک ایک عمل
حیٰ علٰی خیر ال ۔۔۔

وہ صحرا وہ آوازِاذان
مولائی کے عہد و پیمان
چودہ سو برس گزرے اب تک
دیتا ہے صدا خُم کا میدان
حیٰ علٰی خیرال ۔۔۔

میں جس کا مولا ہوں اُس کا
ہے میرے بعد علی مولا
پالانِ شُتر کے ممبر سے
دیتے ہیں صدا محبوبِ خدا
حیٰ علٰی خیرال ۔۔۔

کاندھوں پہ علی ہاتھوں پہ علی
کعبے میں کبھی ممبر سے کبھی
عالم کو نبیِ اکرم نے
بتلایا یہ ہے میرا وصی
حیٰ علٰی خیرال ۔۔۔

ظاہر میں کبھی باطن میں کبھی
انداز وہی اطوار وہی
یہ بُغضِ علی کی بیماری
اس وقت بھی ہے اُس وقت بھی تھی
حیٰ علٰی خیرال ۔۔۔

جنگل جنگل صحرا صحرا
بستی بستی کریا کریا
عالم میں پیامِ حق بن کر
گونجے گی قیامت تک یہ صدا
حیٰ علٰی خیرال ۔۔۔

ہر سُو نہ بھٹک ہر در پہ نہ جا
کیوں پھرتا ہے مارامارا
اب بھی ہیں کُھلی حق کی راہیں
دیتی ہے صدا یہ کرب و بلا
حیٰ علٰی خیرال ۔۔۔

صبح عاشور جب آتی ہے
تاریخِ وفا دوہراتی ہے
ہر سال زمینِ عالم کو
پیغام یہی دے جاتی ہے
حیٰ علٰی خیرال ۔۔۔

ہے صبح دہم محشر ہے عیاں
صف باندھے کھڑے ہیں پیر و جواں
دل کانپ اُٹھے جس وقت گونجی
مقتل میں علی اکبر کی اذاں
حیٰ علٰی خیرال ۔۔۔


haya ala qairil amal
hai waqt abhi nadaan sambhal
khudrat hai kanoon atal
meezane muwaddat par kal ko
tul jaayega ek ek amal
haya ala qairil....

wo sehra wo awaaze azan
maulayi ke ahdo paymaan
chauda sau baras guzre ab tak
deta hai ab tak qum ka maidan
haya ala qairil....

mai jiska maula hoo uska
hai mera baad ali maula
paalane shutar ke mimbar se             
dete hai sada mehboobe khuda
haya ala qairil....

kaandhon pe ali haaton ape ali
kaabe may kabhi mimbar se kabhi
aalam ko nabiye akram ne
batlaye ye hai mera wasi
haya ala qairil....

zaahir may kabhi baatin may kabhi
andaz wohi atvaar wohi
ye bughze ali ki bemaari
is waqt bhi hai us waqt bhi thi
haya ala qairil....

jangal jangal sehra sehra
basti basti khariya khariya
aalam may payame haq bankar
goonjegi qayamat tak ye sada
haya ala qairil....

har soo na bhatak har dar pe na ja
kyun phirta hai maara maara
ab bhi hai khuli haq ki raahein
deti hai sadaye karbobala
haya ala qairil....

subhe ashoor jab aati hai
tareekhe wafa dohrati hai
har saal zameene aalam ko
paigham yehi de jaati hai
haya ala qairil....

hai subhe dahum mehshar hai ayan
saf baandhe kahde hai peero jawan
dil kaamp uthay jis waqt goonji
maqtal may ali akbar ki azan
haya ala qairil....
Noha - Haya Ala Qairil Amal

Nohaqan: Sachey Bhai
Download Mp3
Listen Online