ہوا کے دوش پہ گونجی جو اک نئی صدا
اسلام و علیک ابن رسول شاہ ھدا
خدا کا شکر کہ دیدار آپ کا تو ہوا
تمام اسیروں نے دیکھا سوئے در کوفہ
جو لاش لٹکی ہے در پر وہ تھرتھراتی ہے
سلام کرنے کی آواز اسے آئی ہے
تڑپ کے نیزے سے فرق حسین نے یہ کہا
وعلیکم اے وطن آوارہ و قتل جفا
ادب سے عابد بیماروں ہو گئے گویا
قبول کیجئے مسلم چچا سلام میرا
سنا جو حضرت مسلم بن عقیل کا نام
تو ایک بی بی لگی لاش سے یہ کرنے کلام
کی زوجہ مسلم نے یہ فغاں
ہے میرے دونوں لعل کہاں

احوال کرو کچھ ان کا بیاں
ہیں میرے دونوں لعل کہاں

تھے ساتھ جو میرے دو دل پر
وہ فدیہ کئے میں نے حق پر
جو ساتھ تمہارے تھے ہیں کہاں
ہے دونوں میرے لعل کہاں
کی زوجہ مسلم

میں بستی بستی جائوں گی
اور ڈھونڈ کے ان کو رلائوں گی
بتلائیے کچھ تو ان کا نشاں
ہیں میرے دونوں لعل کہاں
کی زوجہ مسلم

کب تک وہ رہے زیر سایہ
اور کچھ تو ترس ان پر آیا
کس گھر میں ہیم اب تک وہ مہماں
ہیں میرے دونوں لعل کہاں
کی زوجہ مسلم

بس اتنا بتا دیجئے والی
دنیا تو نہیں ان سے خالی
کیا مل گئی ان کو جائے اماں
ہیں میرے دونوں لعل کہاں
کی زوجہ مسلم

دی لاشہ مسلم نے یہ صدا
دے صبر کی طاقت تجھ کو خدا
ہو جائے گا تجھ پر جلد عیاں
ہیں میرے دونوں لعل کہاں
کی زوجہ مسلم

کوفے میں انیس اہل حرم
تھے نالہ کناں وقت ماتم
سن کر یہ صدا محشر تھا عیاں
ہیں میرے دونوں لعل کہاں
کی زوجہ مسلم


hawa ke dosht pe goonji jo ek nayi sada
salaam alaik ibne rasool-e-shahe huda
khuda ka shukr ke deedaar aapka to hua
tamaam aseeron ne dekha suye dare kufa
jo laash latki hai dar par wo thartharati hai
salaam karne ki awaaz usse aati hai
tadapke naize se farkhe hussain ne ye kaha
alaikum ay watan awaarao qateele jafa
adab se abide bemaar yun hue goya
khubool kijiye muslim chacha salaam mera
suna jo hazrate muslim bine aqeel ka naam
to ek bibi lagi laash se ye karne kalaam
ki zowjaye muslim ne ye fughaan
hai mere dono laal kahan

ehwaal karo kuch unka bayaan
hai mere dono laal kahan

thay saath jo mere do dilbar
wo pidiya kiye maine haq par
jo saath tumhare thay hai kahan
hai mere dono laal kahan
ki zowjaye muslim...

mai basti basti jaa-ungi
aur dhoondke unko laa-ungi
batlaiye kuch ko unka nishaan
hai mere dono laal kahan
ki zowjaye muslim...

kab tak wo rahe zere saaya
aur kuch to taras unpar aaya
kis ghar may hai ab tak wo mehmaan
hai mere dono laal kahan
ki zowjaye muslim...

bas itna batadije waali
dunya to nahi unse khaali
kya milgayi unko jaaye amaan
hai mere dono laal kahan
ki zowjaye muslim...

di laashaye muslim ne ye sada
de sabr ki taaqat tujh ko khuda
ho jaayega tujhpar jald ayaan
hai mere dono laal kahan
ki zowjaye muslim...

koofe may anees-e-ehle haram
thay naala kuna waqt-e-matam
sunkar ye sada mehshar tha ayaan
hai mere dono laal kahan
ki zowjaye muslim...
Noha - Hai Mere Dono Laal
Shayar: Anees Pehersari
Nohaqan: Ali Zia Rizvi
Download Mp3
Listen Online