بہت قریب ہے کوثر سے کربلائے حُسین
وسیلہ حق کا کوئی نہیں سوائے حُسین

بتا رہی ہے یہ تاریخِ کربلا ہم کو
جسے مٹائے زمانہ اُسے بنائے حُسین
بہت قریب ہے ۔۔۔

جو آلِ پاک کے منکر ہیں اُن کو بتلا دو
ضیائے دین لب ِ ہے فقط ضیائے حُسین
بہت قریب ہے ۔۔۔

نہ پوچھ جس کے بے رنگ جب نظر آئے
وہ زیرِ خنجر قاتل بھی مسکرائے حُسین
بہت قریب ہے ۔۔۔

مدد کو شِہ نے پُکارا تھا جب دمِ آخر
فضائ میں گونج رہی ہے وہی صدائے حُسین
بہت قریب ہے ۔۔۔

عُدو یہ سمجھے کہ قرآن لے کہ آئے ہیں
جب اپنے ہاتھوں پہ اصغر کو لے کہ آئے حُسین
بہت قریب ہے ۔۔۔

کہا یہ لاشہِ عباس اور شاہِ دیں نے
سکینہ پیاسی ہے پانی کہاں سے لائے حُسین
بہت قریب ہے ۔۔۔

زمیں پہ جب کہیں ذکرِ حُسین ہوتا ہے
فلک سے آتی ہے آواز اب گِرائے حُسین
بہت قریب ہے ۔۔۔

یا ہباک ہے یا خاطر محبت ہے
نظر وہ کرب پہ جس نے نہیں ملائے حُسین
بہت قریب ہے ۔۔۔


bahot kareeb hai kausar se karbala e hussain
waseela haq ka koi nahi siwae hussain

bata rahi ye tareekhe karbala humko
jise mitaye zamana usay banaye hussain
bahot kareeb hai....

jo aale paak ke munkir hai unko batlado
zia e deen labi faqad zia e hussain
bahot kareeb hai....

na pooch jis ke be-rang jab nazar aaye
wo zere khanjar qaatil bhi muskuraye hussain
bahot kareeb hai....

mada ko sheh ne pukara tha jan dame aakhir
fiza may goonj rahi hai wohi sada e hussain
bahot kareeb hai....

udoo ye samjhe ke quran le ke aaye hai
jab apne haaton pe asghar ko le ke aaye hussain
bahot kareeb hai....

kaha ye laashaye abbas aur shahe deen ne
sakina pyasi hai pani kahan se laaye hussain
bahot kareeb hai....

zameen pe jab kahin zikre hussain hota hai
falak se aati hai awaaz ab girya e hussain
bahot kareeb hai....

ya habakh hai khatire mohabbat hai
nazar wo karb pe jisne nahi milaye hussain
bahot kareeb hai....
Noha - Bahot Kareeb Hai
Shayar: Nazar
Nohaqan: Tableeq e Imamia (Nazim Hussain)
Download Mp3
Listen Online