اے میرے باباآپ غریبُ الوطن میں بھی غریبُ الوطن

آپ کا میدان میں تیروں پہ لاشہ رہا
میرے گوہر چھِن گئے آگ سے دامن جلا
اے میرے بابا آپ رہے بے کفن میں بھی رہی بے کفن

آپ کے حلقوم پر شمر کا خنجر چلا
مجھ کو تماچے لگے سر سے چھِنی ہے ردا
اے میرے بابا آپ کا نیزے پہ سر میرے گلے میں رسن
اے میرے بابا ۔۔۔۔۔

آپ کو روتی رہی تشنہ لبی دشت میں
داغِ یتیمی ملا مجھ کو اسی دشت میں
اے میرے بابا آپ ہیں تشنہ دہن میں بھی ہوں تشنہ دہن
اے میرے بابا ۔۔۔۔۔

دونوں کی مظلومیت دیکھی ہے افلاک میں
دونوں کی حُرمت رکھی دشت کی اس خاک میں
اے میرے بابا خاک بنی ہے ردا خاک بنی ہے کفن
اے میرے بابا ۔۔۔۔۔

وقتِ مصیبت ہوئی دونوں ہی ہم سے جدا
دونوں کی تقدیر میں تھا غمِ فرقت لکھا
اے میرے بابا اک بہن آپ کی اک ہے میری بہن
اے میرے بابا ۔۔۔۔۔

آپ نے چھوڑا وطن نوحہ کُناں تھا فلک
کرب و بلا سے کیامیں نے سفر شام تک
اے میرے بابا آپ اسیرِ مہن میں ہوں اسیرِ رسن
اے میرے بابا ۔۔۔۔۔

آپ کے ہمراہ تو اکبر و عباس ہیں
مجھ پہ یہ تنہائیاں روتی ہیں زندان میں
اے میرے بابا میری لحد قید ہے آپ کا روضہ وہ بند
اے میرے بابا ۔۔۔۔۔

قتلِ علمدار سے آپ کی ٹوٹی کمر
پنجوں پہ چلتے ہوئے میں نے کیا ہے سفر
اے میرے بابا آپ کو صدموں کی اور مجھ کو سفر کی تھکن
اے میرے بابا ۔۔۔۔۔

دونوں پہ پردیس میں کیسی مصیبت پڑی
مجھ سے پدر چھِن گیا آپ سے بیٹی چھِنی
اے میرے باباآپ غریبُ الوطن میں بھی غریبُ الوطن
اے میرے بابا ۔۔۔۔۔

آپ ہیں فیضِ رسا آپ کو میری قسم
مظہر و عرفان پر کیجیئے اپنا کرم
اے میرے بابا اک سفیرِ اعزا اک سفیرِ سُخن
اے میرے بابا ۔۔۔۔۔


ay mere baba aap gharibul watan mai bhi gharibul watan

aap ka maidaan may teeron pe lasha raha
mere gohar chin gaye aag se daman jala
ay mere baba aap rahe bekafan mai bhi rahi bekafan

aap ke halqoom par shimr ka qanjar chala
mujhko tamache lage sar se chini hai rida
ay mere baba aap ka naize pe sar mere gale may rasan
ay mere baba....

aap ka roti rahi tashnalabi dasht may
daaghe yateemi mila mujhko isi dasht may
ay mere baba aap hai tashnadahan mai bhi hoon tashnadahan
ay mere baba....

dono ki mazlomiyat dekhi hai aflaak may
dono ki hurmat rakhi dasht ki is khaak may
ay mere baba khaak bani hai rida khaak bani hai kafan
ay mere baba....

waqt-e-musibat hui dono hi hum se juda
dono ki taqdeer may tha ghame furqat likha
ay mere baba ek behan aap ki ek hai meri behan
ay mere baba....

aap ne choda watan nowhakuna tha falak
karbobala se kiya mai ne safar shaam tak
ay mere baba aap aseere mehan mai hoo aseere rasan
ay mere baba....

aap ke hamraah to akbar-o-abbas hai
mujhpe ye tanhaiyan roti hai zindaan may
ay mere baba meri lehad qaid hai aap ka rouza wo band
ay mere baba....

qatl-e-alamdaar se ap ki tooti kamar
panjo pe chalte hue maine kiya hai safar
ay mere baba aap ko sadmon ki aur mujhko safar ki thakan
ay mere baba....

dono pe pardes may kaisi musibat padi
mujhse padar chin gaya aap se beti chini
ay mere baba aap gharibul watan mai bhi gharibul watan
ay mere baba....

aap hai faize rasa aap ko meri qasam
mazhar-o-irfaan par kijiye apna karam
ay mere baba ek safeere aza ek safeere sukhan
ay mere baba....
Noha - Ay Mere Baba
Shayar: Mazhar
Nohaqan: Irfan Haider
Download Mp3
Listen Online