جب آگئی شامِ غریباں ، بپا ہوا ماتم
خیامِ شاہ سے آتی تھی اک صدا پیہم
میں تم سے کرتی ہوں وعدہ اے میرے پیارے چچا
میں تم سے پانی نہ مانگوں گی اب خدا کی قسم

عباس عباس عموں جانم میں اب نامقاہم

پھٹتا ہے غم سے سینا، مشکل ہوا ہے جینا
اہلِ حرم کا آیا، حرطاس میں سفینہ
بے آسرا ہوئے ہم عباس عباس ۔۔۔

دریا سے جلد آئو، غم سے مجھے بچائو
کب تک تماچے کھائے، یہ غم زدہ بتائو
کوئی نہیں ہے ہمدم، عباس عباس ۔۔۔

کانوں سے خوں رواں ہے، لب پر میرے فغاں ہے
دامن سُلگ رہا ہے، صحرا دھواں دھواں ہے
ساری فضا ہے برہم عباس عباس۔۔۔

سر پر نہیں ہے چادر، میداں میں جا کے سرور
کیوں لوٹ کے نہ آئے، کچھ تو بتائو آ کر
ہے بے کس کا علم، عباس عباس۔۔۔

اصغر نے تیر کھایا ، ویراں کیا ہے جھولا
بانو کے دل پہ عموں، یہ زخم ہے کچھ ایسا
جسکا نہیں ہے مرہم، عباس عباس۔۔۔

رسی گلے میں بندھی، اعدا نے کس کے ایسی
تم کو بتائوں کیسے، رُکتی ہے سانس میری
ہونٹوں پہ آگیا دم، عباس عباس ۔۔۔

دُر چھِن گئے ہمارے، گردش میں ہیں ستارے
روداد کیا بیاں ہو، دل کس کو اب پُکارے
ہے بے کسی کا موسم، عباس عباس ۔۔۔

جاتی ہوں سُوئے زنداں، سر ہے پھُوپھی کا عُریاں
بے وارثوں پہ اپنے، کنبہ ہے سارا گِریہ
آنکھیں ہیں سب ہی پُر نم ، عباس عباس ۔۔۔

ریحان اعظمی کا، لکھا ہوا یہ نوحہ
ناصر پڑھا جو میں نے، دل خود بخود پُکارا
لازم ہے اب تو ماتم، عباس عباس ۔۔۔


jab aayi shaame-e-ghareeban, bapa hua matam
qayame shah se aati thi ek sada payham
mai tumse karti hoo wada ay mere pyare chacha
mai tumse pani na maangoongi ab khuda ki qasam

abbas abbas ammu-jaanam man aab namiqaaham

phat-ta hai gham se seena, mushkil hua hai jeena
ehlay haram ka aaya, hirtaas may safina
be-aasra huye hum, abbas abbas....

dariya se jald aao, gham se mujhe bachao
kab tak tamache khaaye, yeh gham-zadaa batao
koi nahi hai humdum, abbas abbas....

kaano se khoon rawa hai, lab par mere fughaan hai
daman sulag raha hai, sehra dhua dhua hai
saari fiza hai barham, abbas abbas....

sar par nahi hai chaadar, maidan may jaake sarwar
kyon laut ke na aaye, kuch to batao aakar
hai bekasi ka aalam, abbas abbas....

asghar ne teer khaaya, veeran kiya hai jhoola
bano ke dil pe ammu, yeh zakhm hai kuch aisa
jiska nahi hai marham, abbas abbas....

rassi gale may baandhi, aada ne kaske aisi
tumko bataun kaise, rukti hai saans meri
honton pay aagaya dum, abbas abbas....

dur chin gaye hamare, gardish may hai sitare
roodaad kya bayan ho, dil kisko ab pukare
hai bekasi ka mausam, abbas abbas....

jaati hoon suye-zindan, sar hai phuphi ka uriyaa
be-waarison pe apni, kunba hai saara giriyaa
aankhein hai sakbi purnam, abbas abbas....

rehan-azmi ka, likha hua yeh noha
nasir pada jo maine, dil khud ba khud pukara
laazim hai ab to matam, abbas abbas....
Noha - Abbas Ammujanam
Shayar: Rehaan Azmi
Nohaqan: Nasir Zaidi
Download Mp3
Listen Online